اتحاد اور استقامت ہی عالم اسلام کا حل

بعثت النبی کی مناسبت سے رہبر انقلاب اسلامی سے ملاقات:

اتحاد اور استقامت ہی عالم اسلام کا حل

رہبر معظم انقلاب: اسلام کےنام پر دہشت گرد گروہوں کو وجود میں لانا اور اسلامی ملکوں کے درمیان تفرقہ انگیزی، امریکہ اور صیہونی غاصب حکومت کی سازشیں ہیں۔

بدھ, اپریل 26, 2017 02:15

مزید
متاثر مسیحی

متاثر مسیحی

یونان کے مصنف ڈاکٹر جورج موسٹیکس

منگل, جنوری 24, 2017 08:55

مزید
محبت اور حمایت، مومن اور انقلابی جوانوں سے

رہبر انقلاب اسلامی:

محبت اور حمایت، مومن اور انقلابی جوانوں سے

آیت اللہ خامنہ ای نے مذہبی اور الہی اہداف کے حصول کےلئے سنجیدہ کوششوں اور انقلاب سے وفاداری کو ملک کی حقیقی پیشرفت کا لازمہ قرار دیا۔

منگل, جنوری 03, 2017 10:29

مزید
مغرب کے مادی اہداف کے خلاف جنگ کی علامت

مغرب کے مادی اہداف کے خلاف جنگ کی علامت

ڈاکٹر "دیمیتری کٹ چھ" قدامت پسند عیسائی مفکرین اور بین الاقوامی تعلقات یونان کی تاریخ کے پروفیسر

جمعرات, دسمبر 29, 2016 10:43

مزید
امام خمینی(ره) کے وحدت و اتحاد کے نظرئے پر ایک نظر

امام خمینی(ره) کے وحدت و اتحاد کے نظرئے پر ایک نظر

الٰہی ادیان خصوصاً اسلامی فرقوں کے درمیان وحدت واتحاد برقرار کرنا حضرت امام خمینی (ره)کے نظریات اور آثار میں ایک واضح اصول کی حیثیت کا حامل ہے لیکن یہاں یہ سوال اٹھتا ہے کہ آپ کس قسم کی وحدت کو زندہ کیا ہے؟

هفته, دسمبر 03, 2016 11:20

مزید
راہ حق میں تمنائے شہادت اور فداکاری کے جذبہ کا احیاء

راہ حق میں تمنائے شہادت اور فداکاری کے جذبہ کا احیاء

میں یہ باور نہیں کرسکتا کہ معنوی بنیادوں سے تہی داماں کوئی شخص لوگوں کیلئے کام کرسکتا ہو

هفته, نومبر 19, 2016 12:02

مزید
جہاد فی سبیل اﷲ کا احیاء

جہاد فی سبیل اﷲ کا احیاء

جہاد فی سبیل اﷲ ایک کمال ہے اور اس سلسلے میں بزدلی کا مظاہرہ کرنا ایک نقص اور عیب

پير, نومبر 14, 2016 12:02

مزید
امام(ره) کا مکتب (1)

امام(ره) کا مکتب (1)

امام خمینی (رضوان اللہ تعالیٰ علیہ) کو بجا طور پر عصر حاضر کا عظیم ترین مصلح دینی فکر ، دینی سیاست اور معنویت کا احیا کنندہ اور انقلاب اسلامی ایران اور عالم اسلام کی سطح پر مستقبل میں برپا ہونے والے اسلامی انقلابات کا بانی قرار دیا جا سکتا ہے۔ امام خمینی(ره) فلسفہ ، عرفان، شاعری، ادب، فقہ، تفسیر قرآن، کلام، سیاست الغرض تمام اسلام معارف میں صاحب الرائے تھے اور ان علوم میں مہارت تامہ رکھتے تھے ۔ ایسا دکھائی دیتا ہے کہ آپ نے مختلف سابقہ مشائی، اشراقی اور اصولی مکاتب کے فلسفی، کلامی، عرفانی اور فقہی افکار سے استفادہ تو کیا لیکن آپ ان میں سے کسی ایک تک محدود نہ رہے اس کے ساتھ ساتھ آپ پکے روایتی اور اصل اسلامی روایات و اقدار اور اصول کے سخت حامی تھے۔ آپ کسی طور پر بھی کنزروینو، روایت پسند، قدامت پرست اور بنیاد پرست نہیں تھے۔ آپ عقلی، استدلالی، اجتہادی، جدت پسندانہ زاویہ نگاہ او مکمل بیداری، شجاعت اور درایت کے ساتھ حال اور مستقبل پر نظر رکھے ہوئے تھے۔

هفته, اکتوبر 22, 2016 11:54

مزید
Page 3 From 4 1 | 2 | 3 | 4